…مجھ میں کوئی ہے

1
572

مجھ میں کوئی ہے جو مجھے سونے نہیں دیتا
رونا بھی چاہوں تو رونے نہیں دیتا

ڈھانپ کے رکھتا ہے مکھوٹوں میں وہ مجھ کو
اصل میرا ظاہر وہ ہونے نہیں دیتا

قید میں ہر پل ہوں دکھنے کو ہوں آذاد
پر آذاد فضائوں میں وہ کھونے نہیں دیتا

آواز تو آتی ہے ضمیر کی مجھ کو
اُس کو اثر انداز وہ ہونے نہیں دیتا

اک جنگ سی برپا ہے ہر بام ہر اک گام
پر جیت سے مانوس وہ ہونے نہیں دیتا

نینٗ بہت تھک چکے دنیا کی چمک میں
پر اُسکو کبھی ماند وہ ہونے نہیں دیتا

1 COMMENT

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here